Reciter: Ali Shanawar

Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain Lyrics In Urdu By Ali Shanawar

ہائۓ صغرا

بھیا علی اکبر

صغرا نے یہ خط اکبر کو لکھا
کیسے ہو میرے پیارے بھیا
بچھڑے ہوئے عرصہ بیت گیا
کب تک یہ بہن دیکھے رستہ
جب گھر کو پرندے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب گھر کو پرندے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

لو قاصد صغرا گھر سے چلا
لکھا ہے بتاؤ اے بھیا
اب تک نہ خیال آیا میرا
کیا ایسی ہوئی ہے مجھ سے خطا
کیا ایسے روٹھ کے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب گھر کو پرندے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

سب چھوڑ گئے ہم کو تنہا
کس حال میں ہوں کیا تم کو پتہ
بیمار کو دے اب کون دوا
آ جاؤ جو تم میں پاؤں شفا
جب چین سے سب سو جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب گھر کو پرندے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب بالی سکینہ اور اصغر
ملتے ہیں گلے تم سے ہنس کر
اور ساتھ میں ہوں ماں اور پدر
بس اتنا بتا بھیا اکبر
سب گھر میں ہنستے ہنساتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب گھر کو پرندے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب جب بھی مصلے پر ـبھیا
کرتے ہو نماز فجر ادا
بیمار کے حق میں بحر شفا
کرتے ہیں دعا میرے بابا
سب اپنے ہاتھ اٹھاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب گھر کو پرندے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

قاسم جو سکینہ کو بھیا
دیتا ہے کوئی لا کر تحفہ
دونوں سے گلے مل کر بابا
دیتے ہیں دعا لے کر بوسہ
اور پیار سے سر سہلاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب گھر کو پرندے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب گھر میں خوشی کا ہو ساماں
سب ایک جگہ ہوں پیر و جواں
خوش دیکھ کے سب کو ہوں اماں
آ جائے کوئی گھر میں مہماں
جب دستر خوان بچھاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب گھر کو پرندے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

حسرت ہے تیرا سہرا دیکھوں
ماں جائے تیرا ماتھا چوموں
باتیں تو بہت ہیں کیا لکھوں
نادار ہوں بھیا کیا بھیجوں
احباب جو تحفے لاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب گھر کو پرندے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب ذکر کبھی ہوتا ہو گا
ماں جائے تمھاری شادی کا
خوش ہوں گی سکینہ اور کبری
باندھے گا علی اکبر سہرا
خوشیوں کے پھول کھلاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب گھر کو پرندے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

کیا اور لکھوں کیا بتلاؤں
دل چیر کے کیسے دکھلاؤں
خود آؤں کہ تو کو بلواؤں
بھیا میں تجھے کیسے پاؤں
بس اتنا اشک بہاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

جب گھر کو پرندے جاتے ہیں
کیا ہم بھی تمھیں یاد آتے ہیں

قاصد جو خط صغرا لایا
اک بات کمر تھامے تھا کھڑا
بھائی کے لبوں پر تھا صغرا
رو رو کے شناور اور رضا
خط صغرا کا دہراتے ہیں

بھیا علی اکبر

Haye Sughra (x3)

Bhaia Ali Akbar (x6)

Sughra Ny Yeh Khat Akbar Ko Likha
Kaisy Ho Mery Pyaray Bhaia
Bichrhay Huye Arsa Beet Gaya
Kab Tak Yeh Behan Dekhay Rasta
Jab Ghar Ko Parinday Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Ghar Ko Parinday Jatay Hian
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Lo Qasid E Sughra Ghar Sy Chala
Likha Hai Batao Ay Bhaia
Ab Tak Na Khayal Aaya Mera
Kya Aisi Hui Hai Mujh Sy Khata
Kya Aisy Rooth Ky Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Ghar Ko Parinday Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Sab Chorh Gaye Hum Ko Tanha
Kis Haal Mein Hun Kya Tum Ko Pata
Beemar Ko Dy Ab Kon Dawa
Aa Jao Jo Tum Main Paun Shifa
Jab Chain Sy Sab So Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Ghar Ko Parinday Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Bali Sakina Aur Asghar
Milty Hain Galy Tum Sy Hans Kar
Aur Sath Mein Hon Maan Aur Padar
Bas Itna Bata Bhaia Akbar
Sab Ghar Mein Hansty Hansaty Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Ghar Ko Parinday Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Jab Bhi Musallay Par Bhaia
Karty Ho Namaz E Fajar Ada
Beemar Ky Haq Mein Behr E Shifa
Karty Hain Dua Mery Baba
Sab Apny Hath Uthaty Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Ghar Ko Parinday Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Qasim Jo Sakina Ko Bhaia
Deta Hai Koi La Kar Tohfa
Dono Sy Galy Mil Kar Baba
Dety Hain Dua Ly Kar Bosa
Aur Pyar Sy Sar Sehlaty Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Ghar Ko Parinday Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Ghar Mein Khushi Ka Ho Samaan
Sab Aik Jaga Hon Peer O Jawan
Khush Dekh Ky Sab Ko Hon Amman
Aa Jaye Koi Ghar Mein Mehman
Jab Dastar Khuwan Bichatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Ghar Ko Parinday Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Hasrat Hai Tera Sehra Dekhun
Maan Jaye Tera Matha Choomon
Baten To Bahut Hain Kya Likhun
Nadaar Hun Bhaia Kya Bhejun
Ahbab Jo Tohfay Latay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Ghar Ko Parinday Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Zikr Kabhi Hota Ho Ga
Maan Jaye Tumhari Shadi Ka
Khush Hon Gi Sakina Aur Kubra
Bandhy Ga Ali Akbar Sehra
Khushiyon Ky Phool Khilaty Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Ghar Ko Parinday Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Kya Aur Likhun Kya Batlaun
Dill Cheer Ky Kaisy Dikhlaun
Khud Aun Ky Tum Ko Bulwaun
Bhaia Main Tujhy Kaisy Paun
Bas Tanha Ashk Bahatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Jab Ghar Ko Parinday Jatay Hain
Kya Hum Bhi Tumhein Yad Atey Hain

Qasid Jo Khat E Sughra Laya
Ek Bap Kamar Thamy Tha Kharha
Bhai Ky Labon Par Tha Sughra
Ro Ro Ky Shanawar Aur Raza
Khat Sughra Ka Dohraty Hain

Bhaia Ali Akbar (x4)

Join Khairilamal on WhatsApp

WhatsApp

Leave a Reply