Reciter: Mir Hasan Mir

Akbar Ka Lahu Lyrics In Urdu By Mir Hasan Mir

Akbar Ka Lahu Lyrics Urdu by Mir Hasan Mir & Mir Qasim Mir

اکبر ہائے اکبر ہائے اکبر

اکبر ہائے اکبر

اکبر ہائے اکبر ہائے اکبر

اکبر کا لہو شہہ کی عباء تک پہنچ گیا
دستار سے وہ ماں کی ردا تک پہنچ گیا

اکبر کا لہو شہہ کی عباء تک پہنچ گیا

ایسے گری ہے خیمے میں اکبر کی لاش پر
زینب کا خون خاکِ شفا تک پہنچ گیا

اکبر کا لہو شہہ کی عباء تک پہنچ گیا

لیلیٰ یہ رو کے کہتی تھی اکبر کہاں ہو تم
ظالم کا ہاتھ میری ردا تک پہنچ گیا

اکبر کا لہو شہہ کی عباء تک پہنچ گیا

آواز رن سے آئی کہ بابا میں گر پڑا
گرتا ہوا حسین صدا تک پہنچ گیا

اکبر کا لہو شہہ کی عباء تک پہنچ گیا

سینے میں نیزہ توڑ کے کہتا تھا یہ لعین
دیکھو حسین اپنی قضا تک پہنچ گیا

اکبر کا لہو شہہ کی عباء تک پہنچ گیا

مولا ضعیف ہو گئے کچھ دیر میں مگر
اکبر کا لاشہ آلِ عباء تک پہنچ گیا

اکبر کا لہو شہہ کی عباء تک پہنچ گیا

جس ہاتھ نے گرایا تھا ہمشکلِ مصطفیٰ
نیزہ لئیے وہ ہاتھ ردا تک پہنچ گیا

اکبر کا لہو شہہ کی عباء تک پہنچ گیا

اکبر کا لہو شہہ کی عباء تک پہنچ گیا
دستار سے وہ ماں کی ردا تک پہنچ گیا

اکبر کا لہو شہہ کی عباء تک پہنچ گیا

Akbar Haye Akbar Haye Akbar

Akbar Haye Akbar

Akbar Haye Akbar Haye Akbar

Akbar Ka Lahu Sheh Ki Abaa Tak Pahunch Gaya
Dastaar Say Woh Maan Ki Rida Tak Pahunch Gaya

Askbar Ka Lahu Sheh Ki Abaa Tak Pahunch Gaya

Aisay Giri Hai Khaimay Mein Akbar Ki Lash Par
Zainab Ka Khoon Khak E Shifa Tak Pahunch Gaya

Akbar Ka Lahu Sheh Ki Abaa Tak Pahunch Gaya

Laila Yeh Ro Ky Kehti Thi Akbar Kahan Ho Tum
Zaalim Ka Hath Meri Rida Tak Pahunch Gaya

Akbar Ka Lahu Sheh Ki Abaa Tak Pahunch Gaya

Awaz Rann Say Aai Keh Baba Main Gir Parha
Girta Hua Hussain Sadaa Tak Pahunch Gaya

Akbar Ka Lahu Sheh Ki Abaa Tak Pahunch Gaya

Seenay Mein Naiza Torh Kay Kehta Tha Yeh Laeen
Daikho Hussain Apni Qaza Tak Pahunch Gaya

Akbar Ka Lahu Sheh Ki Abaa Tak Pahunch Gaya

Maula Zaeef Ho Gaye Kuch Dair Mein Magar
Akbar Ka Lasha Aal E Abaa Tak Pahunch Gaya

Akbar Ka Lahu Sheh Ki Abaa Tak Pahunch Gaya

Jis Hath Nay Giraya Tha Humshakal E Mustafa
Naiza Liye Woh Hath Rida Tak Pahunch Gaya

Akbar Ka Lahu Sheh Ki Abaa Tak Pahunch Gaya

Akbar Ka Lahu Sheh Ki Abaa Tak Pahunch Gaya
Dastaar Say Woh Maan Ki Rida Tak Pahunch Gaya

Akbar Ka Lahu Sheh Ki Abaa Tak Pahunch Gaya

Join Khairilamal on WhatsApp

WhatsApp

Leave a Reply