Reciter: Ahmed Raza Nasiri

Apni Zainab Ko Kaleje Se Lagayen Baba Lyrics In Urdu By Ahmed Raza Nasiri

ہائے علی یا علی

ہائے زینب

ہائے علی یا علی

اپنی زینب کو کلیجے سے لگا ئیں بابا

اپنی زینب کو کلیجے سے لگائیں بابا
پھر سے پہلے کی طرح دیجئے دعائیں بابا

اپنی زینب کو کلیجے سے لگائیں بابا

کب سے بے چین ہوں آوازیں سنائیں بابا
تنہا مر جاؤں گی میں دور نہ جائیں بابا

پھر سے پہلے کی طرح دیجئے دعائیں بابا

اپنی زینب کو کلیجے سے لگائیں بابا

ماں کا غم بھول نہ پائی تھی اب آپ کا غم
کتنی ٹوٹیں گی میرے سر پہ بلائیں بابا

پھر سے پہلے کی طرح دیجئے دعائیں بابا

اپنی زینب کو کلیجے سے لگائیں بابا

بھائی شبیر پہ بھی اشک بہانے ہیں مجھے
مجھ کو اتنا تو ابھی سے نہ رلائیں بابا

پھر سے پہلے کی طرح دیجئے دعائیں بابا

اپنی زینب کو کلیجے سے لگائیں بابا

اپنے بہتے ہوئے اشکوں سے لگا دوں مرحم
سر کا بیٹی کو ذرا زخم دکھائیں بابا

پھر سے پہلے کی طرح دیجئے دعائیں بابا

اپنی زینب کو کلیجے سے لگائیں بابا

بیٹیاں باپ سے مانوس بہت ہوتی ہیں
کیسے جھیلوں گی یتیمی کی سزائیں بابا

پھر سے پہلے کی طرح دیجئے دعائیں بابا

اپنی زینب کو کلیجے سے لگائیں بابا

آپ مشکل میں گھرے لوگوں کی کرتے ہیں مدد
میں ہوں تکلیف میں امداد کو آئیں بابا

پھر سے پہلے کی طرح دیجئے دعائیں بابا

اپنی زینب کو کلیجے سے لگائیں بابا

اس مصیبت کو میں برداشت نہیں کر سکتی
کیسے میں صبر کروں ہائے بتائیں بابا

پھر سے پہلے کی طرح دیجئے دعائیں بابا

اپنی زینب کو کلیجے سے لگائیں بابا

Haye Ali Ya Ali

Haye Zainab

Haye Ali Ya Ali

Apni Zainab Ko Kaleje Se Lagayen Baba

Apni Zainab Ko Kaleje Se Lagayen Baba
Phir Say Pehlay Ki Tarah Dijiye Duayen Baba

Apni Zainab Ko Kaleje Se Lagayen Baba

Kab Say Bechain Hun Awazen Sunayen Baba
Tanha Mar Jaun Gi Main Door Na Jayen Baba

Phir Say Pehlay Ki Tarah Dijiye Duayen Baba

Apni Zainab Ko Kaleje Se Lagayen Baba

Maan Ka Gham Bhool Nahi Pai Thi Ab Aap Ka Gham
Kitni Tooten Gi Meray Sar Pay Balayen Baba

Phir Say Pehlay Ki Tarah Dijiye Duayen Baba

Apni Zainab Ko Kaleje Se Lagayen Baba

Bhai Shabbir Pay Bhi Ashk Bahanay Hain Mujhay
Mujh Ko Itna To Abhi Say Na Rulayen Baba

Phir Say Pehlay Ki Tarah Dijiye Duayen Baba

Apni Zainab Ko Kaleje Se Lagayen Baba

Apnay Behtay Huye Ashkon Say Laga Dun Marham
Sar Ka Beti Ko Zara Zakhm Dikhayen Baba

Phir Say Pehlay Ki Tarah Dijiye Duayen Baba

Apni Zainab Ko Kaleje Se Lagayen Baba

Betiyan Baap Say Manoos Bahut Hoti Hain
Kaisay Jhailun Gi Yateemi Ki Sazayen Baba

Phir Say Pehlay Ki Tarah Dijiye Duayen Baba

Apni Zainab Ko Kaleje Se Lagayen Baba

Aap Mushkil Mein Ghiray Logon Ki Kartay Hain Madad
Main Hun Takleef Mein Imdad Ko Ayen Baba

Phir Say Pehlay Ki Tarah Dijiye Duayen Baba

Apni Zainab Ko Kaleje Se Lagayen Baba

Is Museebat Ko Main Bardasht Nahi Kar Sakti
Kaisay Main Sabr Karun Haye Batayen Baba

Phir Say Pehlay Ki Tarah Dijiye Duayen Baba

Apni Zainab Ko Kaleje Se Lagayen Baba

Join Khairilamal on WhatsApp

WhatsApp

Leave a Reply