Reciter: Nadeem Sarwar

Jaag Sakina Jaag Lyrics In Urdu By Nadeem Sarwar

لو ہو گئی رہائی لو قافلہ چلا
سر جب ہر اک شہید کو سجاد کو ملا
تب مرقد سکینہ پہ سجاد نے کہا
جاگ سکینہ جاگ بابا کا سر آیا

بابا تمھارا آیا گیا وقت نیند کا
جاگ سکینہ جاگ بابا کا سر آیا

سینے پہ سونے والی مٹی پہ سو گئی
بابا کو روتے روتے جوخاموش کو گئی
رو رو کے ماں نے قبر سکینہ پہ یہ کہا
جاگ سکینہ جاگ بابا کا سر آیا

بی بی کرو سلام ادب کا مقام ہے
بی بی تیرے سرہانے شاہ تشنہ گام ہے
اے جان جلدی بدلو یہ کرتا پھٹا ہوا
جاگ سکینہ جاگ بابا کا سر آیا

بابا کو ڈھونڈتی تھی سکینہ اٹھو اٹھو
راتوں کو جاگتی تھی سکینہ اٹھو اٹھو
لو آ گئے ہیں بابا اے جان جاگ جا
جاگ سکینہ جاگ بابا کا سر آیا

بابا کے پاس سونا نہ سونا زمین پر
رکھو لبوں کو لب پر جبیں کو جبین پر
اعدا کی گھزکیوں کا زمانہ گزر گیا
جاگ سکینہ جاگ بابا کا سر آیا

پیغام روز دیتی تھی عموں کے نام تم
روتی تھی یاد کر کے انہیں صبح و شام تم
جاگو کہ جا رہے ہیں جہاں سوتے ہیں چچا
جاگ سکینہ جاگ بابا کا سر آیا

کس طرح سوئی بالی سکینہ نہ پوچھئے
رنج و الم سے پھٹتنا ہے سینہ نہ پوچھئے
جاگی نہ پھر کبھی وہ بہت ماں نے دی صدا
جاگ سکینہ جاگ بابا کا سر آیا

صدیاں گزر گئی ہیں مگر سرور و ویحان
زندان شام روئے تو روتا ہے آسمان
اب بھی پکارتے ہیں یہی شاہ کربلا
جاگ سکینہ جاگ بابا کا سر آیا

Lo Ho Gai Rihai Lo Qafila Chala
Sar Jab Har Ek Shaheed Ka Sajjad Ko Mila
Tab Marqad E Sakina Py Sajjad Ny Kaha
Jaag Sakina Jaag Baba Ka Sar Aaya

Baba Tumhara Aya Gaya Waqt Neend Ka
Jaag Sakina Jaag Baba Ka Sar Aaya

Seeny Py Sony Wali Matti Py So Gai
Baba Ko Roty Roty Jo Khamosh Ho Gai
Ro Ro Ky Maan Ny Qabr E Sakina Py Yeh Kaha
Jaag Sakina Jaag Baba Ka Sar Aaya

Bibi Karo Salam Adab Ka Maqam Hai
Bibi Tery Sarhany Shah E Tishna Gaam Hai
Ay Jaan Jaldi Badlo Yeh Kurta Phata Hua
Jaag Sakina Jag Baba Ka Sar Aaya

Baba Ko Dhundti Thi Sakina Utho Utho
Raton Ko Jagti Thi Sakina Utho Utho
Lo Aa Gaye Hain Baba Ay Jaan Jaag Ja
Jag Sakina Jaag Baba Ka Sar Aya

Baba Ky Pas Sona Na Sona Zameen Par
Rakho Labon Ko Lab Par Jabeen Ko Jabeen Par
Ahdaa Ki Ghurhkion Ka Zamana Guzar Gaya
Jag Sakina Jag Baba Ka Sar Aya

Paigham Roz Deti Thi Ammu Ky Naam Tum
Roti Thi Yad Kar Ky Unhen Subh O Sham Tum
Jago Ky Ja Rahy Hain Jahan Soty Hain Chacha
Jag Sakina Jag Baba Ka Sar Aya

Kis Tarha Soi Bali Sakina Na Poochiye
Ranj O Alam Sy Phat’ta Hai Seena Na Poochiye
Jaagi Na Phir Kabhi Woh Bahut Maan Ny Di Sada
Jaag Sakina Jaag Baba Ka Sar Aya

Sadiyan Guzar Gai Hain Magar Sarwar O Rehan
Zindaan E Sham Roye To Rota Hai Aasman
Ab Bhi Pukarty Hain Yehi Shah E Karbala
Jag Sakina Jag Baba Ka Sir Aya

Join Khairilamal on WhatsApp

WhatsApp

Leave a Reply