Reciter: Farhan Ali Waris

Abbas Tumhe Bali Sakina Ki Kasam Hai Lyrics In Urdu By Farhan Ali Waris

تو شیر جری ہے سخیوں کا سخی ہے
یا باب حوائج میری فریاد کو سن لے

امداد کرو میری اب وقت کرم ہے
عباس تمھیں بالی سکینہ کی قسم ہے

آیا ہوں تیرے در پے بڑی آس ہے مولا
ہر ٹوٹے ہوئے دل کا تو احساس ہے مولا
تو ایک سمندر ہے مجھے پیاس ہے مولا
زخموں کی دوا صرف تیرے پاس ہے مولا

امداد کرو میری اب وقت کرم ہے
عباس تمھیں بالی سکینہ کی قسم ہے

بے دست سخی اپنی سخاوت کو دکھا دے
مرتے ہوئے لوگوں کی حیات اور بڑھا دے
تو چاہے تو مٹی کو بھی اکسیر بنا دے
بیمار کو عباس علمدار شفا دے

امداد کرو میری اب وقت کرم ہے
عباس تمھیں بالی سکینہ کی قسم ہے

ملتی ہے تیرے در سے گناہ گار کو عزت
بٹتی ہے زمانے میں تیرے ہاتھ سے دولت
اولاد شفا رزق ہنر نطق سماعت
ایثار وفا عشق خدا تیری اطاعت

امداد کرو میری اب وقت کرم ہے
عباس تمھیں بالی سکینہ کی قسم ہے

تو باب حوائج ہے سخی ابن سخی ہے
اللہ کے نزدیک تیری بات بڑی ہے
جن ماؤں کی گودی ابھی ویران پڑی ہے
اولاد انہیں دے دے دعا ان کی یہی ہے

امداد کرو میری اب وقت کرم ہے
عباس تمھیں بالی سکینہ کی قسم ہے

حالات نے اے مولا مجھے توڑ دیا ہے
آلام و مصائب سے مجھے جوڑ دیا ہے
طوفانوں کا رخ میری طرف موڑ دیا ہے
اپنوں نے بھی اب ساتھ میرا چھوڑ دیا ہے

امداد کرو میری اب وقت کرم ہے
عباس تمھیں بالی سکینہ کی قسم ہے

ہر ایک سے یہ بات تو کرتا نہیں کوئی
جز تیرے کہاں جا کے وہ پھیلائیں گے جھولی
ماں باپ کے سینوں پے یہی بوجھ ہے بھاری
بیٹی کے نصیبوں کو جگا دے میرے غازی

امداد کرو میری اب وقت کرم ہے
عباس تمھیں بالی سکینہ کی قسم ہے

بے جرم عزادار جو ہیں قید میں مولا
زنداں میں بچھاتے ہیں مگر فرش عزا کا
مل جائے انہیں سید سجاد کا صدقہ
دے ان کو رہائی کی خبر وارث زہرا

امداد کرو میری اب وقت کرم ہے
عباس تمھیں بالی سکینہ کی قسم ہے

یہ کہہ کے نگاہوں کو تیرے در پے جھکایا
بس سر پے سلامت رہے ماں باپ کا سایہ
دے علم و ہنر بچوں کو صحت بھی خدارا
کب ہم نے کسی غیر کو مشکل میں پکارا

امداد کرو میری اب وقت کرم ہے
عباس تمھیں بالی سکینہ کی قسم ہے

آیا ہوں تیرے در پے یہ امید لگا ار
پہنا ہے تیرے نام کا تعویذ بنا کر
دل کہتاہے سرکار سے بس اتنی دعا کر
مظہر کو بھی فرحان سی اولاد عطا کر

امداد کرو میری اب وقت کرم ہے
عباس تمھیں بالی سکینہ کی قسم ہے

Tu Shair Jari Hai Sakhion Ka Sakhi Hai
Ya Bab E Hawayej Meri Faryad Ko Sun Lay

Imdad Karo Meri Ab Waqt E Karam Hai
Abbas Tumhen Bali Sakina Ki Qasam Hai

Aaya Hun Teray Dar Py Barhi Aas Hai Maula
Har Tootay Huye Dil Ka Tu Ehsas Hai Mola
Tu Aik Samandar Hai Mujhay Pyas Hai Mola
Zakhmon Ki Dawa Sirf Tery Pas Hai Mola

Imdad Karo Meri Ab Waqt E Karam Hai
Abbas Tumhen Bali Sakina Ki Kasam Hai

Bey Dast Sakhi Apni Sakhawat To Dikha Day
Martay Huye Logon Ki Hayat Aur Barha Day
Tu Chahay To Matti Ko Bhi Akseer Bana Day
Beemar Ko Abbas E Alamdar Shifa Day

Imdad Karo Meri Ab Waqt E Karam Hai
Abbas Tumhen Bali Sakina Ki Kasam Hai

Milti Hai Teray Dar Say Gunahgar Ko Izzat
Bat’ti Hai Zamanay Mein Teray Hath Say Daolat
Aolad Shifa Rizq Hunar Nutq Sama’at
Esaar Wafa Ishq E Khuda Teri Ata’at

Imdad Karo Meri Ab Waqt E Karam Hai
Abbas Tumhen Bali Sakina Ki Kasam Hai

Tu Baba E Hawayej Hai Sakhi Ibne Sakhi Hai
Allah Ky Nazdeeq Teri Baat Barhi Hai
Jin Maaon Ki Goudi Abhi Veeran Parhi Hai
Aolad Unhen Day Day Dua Un Ki Yehi Hai

Imdad Karo Meri Ab Waqt E Karam Hai
Abbas Tumhen Bali Sakina Ki Kasam Hai

Halat Nay Ay Maula Mujhay Torh Diya Hai
Aalam O Masayeb Say Mujhay Jorh Diya Hai
Toofanon Ka Rukh Meri Taraf Morh Diya Hai
Apnon Nay Bhi Ab Sath Mera Chorh Diya Hai

Imdad Karo Meri Ab Waqt E Karam Hai
Abbas Tumhen Bali Sakina Ki Kasam Hai

Har Aik Say Yeh Bat To Karta Nahi Koi
Juzz Teray Kahan Ja Ky Woh Phailayen Gay Jholi
Maan Baap Ky Seenon Pay Yehi Bojh Hai Bhari
Beti Ky Naseebon Ko Jaga Do Meray Ghazi

Imdad Karo Meri Ab Waqt E Karam Hai
Abbas Tumhen Bali Sakina Ki Kasam Hai

Bey Jurm Azadar Jo Hain Qaid Mein Mola
Zindan Mein Bichatay Hain Magar Farsh Aza Ka
Mil Jaye Unhen Sayed E Sajjad Ka Sadqa
Dy Un Ko Rehai Ki Khabar Waris E Zehra

Imdad Karo Meri Ab Waqt E Karam Hai
Abbas Tumhen Bali Sakina Ki Kasam Hai

Yeh Keh Ky Nigahon Ko Teray Dar Py Jhukaya
Bas Sar Pay Salamat Rahay Maan Baap Ka Saya
Day Ilm O Hunar Bachon Ko Sehat Bhi Khudara
Kab Hum Nay Kisi Ghair Ko Mushkil Mein Pukara

Imdad Karo Meri Ab Waqt E Karam Hai
Abbas Tumhen Bali Sakina Ki Kasam Hai

Aaya Hun Teray Dar Pay Yeh Ummeed Laga Kar
Pehna Hai Teray Naam Ka Taweez Bana Kar
Dil Kehta Hai Sarkar Say Bas Itni Dua Kar
Mazhar Ko Bhi Farhan Si Aulad Ata Kar

Imdad Karo Meri Ab Waqt E Karam Hai
Abbas Tumhen Bali Sakina Ki Kasam Hai

Join Khairilamal on WhatsApp

WhatsApp

Leave a Reply