Reciter: Farhan Ali Waris

Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan Lyrics In Urdu By Farhan Ali Waris

فاطمہ زہرا فاطمہ زہرا
فاطمہ زہرا فاطمہ زہرا

غم حسین میں کیسا شرف یہ پایا ہے
کہ اپنے پاتھوں سے میں نے علم سجایا ہے

سنا ہے آتی ہیں مجلس میں فاطمہ زہرا
یہ بات سوچ کے فرش عزا بچھایا ہے

کرم یہ مجلس شبیر نے کیا ورنہ
کہاں غریب کا گھر اور کہاں حسین کی ماں

خبر ہے بنت رسول خدا کے آنے کی
بدل رہی ہیں ہوائیں غریب خانے کی
میرا نصیب کہ مہماں ہوئیں میری زہرا
کہاں غریب کا گھر اور کہاں حسین کی ماں

کرم یہ مجلس شبیر نے کیا ورنہ
کہاں غریب کا گھر اور کہاں حسین کی ماں

فرشتے شاہ و گدا گر سبھی ہیں پیش نظر
ہیں انبیا کی قطاریں لگیں میرے گھر پر
تمھارے آنے سے بی بی یہ مرتبہ پایا
کہاں غریب کا گھر اور کہاں حسین کی ماں

کرم یہ مجلس شبیر نے کیا ورنہ
کہاں غریب کا گھر اور کہاں حسین کی ماں

یہ مجلس شبیر میں بہتے ہوئے آنسو
فردوس کے باغوں میں سجا دیتی ہے زہرا
شہزادی زمیں پر اسے گرنے نہیں دیتی
بچ جائیں تو کوثر میں ملا دیتے ہے زہرا

یہ نوحہ خوانی یہ سوز و سلام اور ماتم
ہمارے اشک ہیں بی بی کے زخم کا مرحم
اگر نہ ہوتے وسیلہ یہ ماتم و نوحہ
کہاں غریب کا گھر اور کہاں حسین کی ماں

کرم یہ مجلس شبیر نے کیا ورنہ
کہاں غریب کا گھر اور کہاں حسین کی ماں

غریب خانے کو جنت بنا دیا بی بی
خوشی یہ ایسی ہے جس نے رلا دیا بی بی
ہر ایک اشک نے آنکھوں سے گرتے کرتے کہا
کہاں غریب کا گھر اور کہاں حسین کی ماں

کرم یہ مجلس شبیر نے کیا ورنہ
کہاں غریب کا گھر اور کہاں حسین کی ماں

سر حسین جو شیریں کے گھر آیا تھا
سر حسین کے ہمراہ آئی تھیں زہرا
جو دیکھا بی بی کو شیریں نے یہ کیا نوحہ
کہاں غریب کا گھر اور کہاں حسین کی ماں

کرم یہ مجلس شبیر نے کیا ورنہ
کہاں غریب کا گھر اور کہاں حسین کی ماں

جب کسی گھر میں کوئی مر جائے
دنیا غم بانٹنے کو آتی ہے
ہائے کتنی غریب ہیں زہرا
پرسہ لینے بھی چل کے آتی ہیں

یا حسین یا حسین
یا حسین یا حسین

گھر میں میرے مجلس ہوئی اور بچھ گیا فرش عزا
ذاکر نے جب مجلس پڑھی اور حال رخصت کا جو پڑھا
اتنا روئی زہرا، اتنا روئی زہرا

فرحان اور مظہر پڑھا نوحہ شاہ مظلوم کا
تھا ذکر جب عاشور کا شبیر پر خنجر چلا
اتنا روئی زہرا، اتنا روئی زہرا

دیتے رہے اہل عزا غازی کا پرسہ سرور کا پرسہ
اکبر کا قاسم کا اصغر کا پرسہ
اتنا روئی زہرا، اتنا روئی زہرا

زینب کا کلثوم و فضہ کا پرسہ
سجاد بالی سکنیہ کا پرسہ
اتنا روئی زہرا، اتنا روئی زہرا

بالی کا پرسہ، چادر کا پرسہ
عون و محمد کا باقر کا پرسہ
اتنا روئی زہرا، اتنا روئی زہرا

نیزوں پہ رکھے ہر اک سر کا پرسہ
بی بی تمھارے بھرے گھر کا پرسہ
اتنا روئی زہرا، اتنا روئی زہرا

اتنا روئی زہرا، اتنا روئی زہرا
اتنا روئی زہرا، اتنا روئی زہرا

Fatima Zehra Fatima Zehra
Fatima Zahra Fatima Zahra

Ghum E Hussain Mein Kaisa Sharaf Yeh Paaya Hai
Ky Apny Hathon Sy Mainy Alam Sajaya Hai

Suna Hai Aati Hain Majlis Mein Fatima Zehra
Yeh Baat Soch Ky Farsh E Azaa Bichaya Hai

Karam Yeh Majlis E Shabbir Ny Kiya Warna
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Karam Yeh Majlis E Shabbir Ny Kiya Warna
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Khabar Hai Bint E Rasool E Khuda Ky Aanay Ki
Badal Rahi Hai Hawaeen Ghareeb Khanay Ki
Mera Naseeb Ky Mehman Huiin Meri Zahra
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Karam Yeh Majlis E Shabbir Ny Kiya Warna
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Farishty, Shah O Gadaa Gar Sabhi Hain Paish E Nazar
Hain Anbiya Ki Qataaren Lagiin Mery Ghar Par
Tumhary Aanay Sy Bibi Yeh Martaba Paya
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Karam Yeh Majlis E Shabbir Ny Kiya Warna
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Yeh Majlis E Shabbir Mein Behtay Huye Aansoo
Firdous Ky Baaghon Mein Sajaa Deti Hai Zahra
Shehzadi Zameen Par Isy Girny Nahi Deti
Bach Jayen To Kosar Mein Mila Deti Hain Zahra

Yeh Noha Khuwani, Yeh Soz O Salam Aur Matam
Hamary Ashq Hain Bibi Ky Zakhm Ka Marham
Agar Na Hoty Waseela Yeh Maatam O Noha
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Karam Yeh Majlis E Shabbir Ny Kiya Warna
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Ghareeb Khany Ko Jannat Bana Diya Bibi
Khushi Yeh Aisi Hai Jis Ny Rula Diya Bibi
Har Aik Ashk Ny Aankon Sy Girty Girty Kaha
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Karam Yeh Majlis E Shabbir Ny Kiya Warna
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Sar E Hussain Jo Sheereen Ky Ghar Aya Tha
Sar E Hussain Ky Hamraah Aai Thiin Zahra
Jo Dekha Bibi Ko Shereen Ny, Yeh Kiya Noha
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Karam Yeh Majlis E Shabbir Ny Kiya Warna
Kahan Ghareeb Ka Ghar Aur Kahan Hussain Ki Maan

Jab Kisi Ghar Mein Koi Mar Jaye
Duniya Ghum Bantny Ko Aati Hai
Haye Kitni Ghareeb Hain Zahra
Pursa Lenay Bhi Chal K Aati Hain

Ya Hussain, Ya Hussain
Ya Hussain, Ya Hussain

Ghar Mein Mery Majlis Hui Aur Bich Gaya Farsh E Aza
Zakir Ny Jab Majlis Parhi Aur Haal Rukhsat Ka Jo Parha
Itna Roi Zahra, Itna Roi Zahra

Farhan Aur Mazhar Parha, Noha Shah E Mazloom Ka
Tha Zikr Jab Aashoor Ka, Shabbir Par Khanjar Chala
Itna Roi Zahra, Itna Roi Zahra

Dety Rahy Ahl E Azaa, Ghazi Ka Pursa, Sarwar Ka Pursa
Akbar Ka, Qasim Ka, Asghar Ka Pursa
Itna Roi Zahra, Itna Roi Zahra

Zainab Ka, Kulsoom O Fizza Ka Pursa
Sajjad, Bali Sakina Ka Pursa
Itna Roi Zahra, Itna Roi Zahra

Bali Ka Pursa, Chadar Ka Pursa
Aon O Muhammad Ka, Baqir Ka Pursa
Itna Roi Zahra, Itna Roi Zahra

Naizon Py Rakhy Har Ik Sir Ka Pursa
Bibi Tumhary Bhary Ghar Ka Pursa
Itna Roi Zahra, Itna Roi Zahra

Itna Roi Zahra, Itna Roi Zahra
Itna Roi Zahra, Itna Roi Zahra

Join Khairilamal on WhatsApp

WhatsApp

Leave a Reply