Reciter: Nadeem Sarwar

Meri Sakina Lyrics In Urdu By Nadeem Sarwar

Meri Sakina Lyrics in Urdu by Nadeem Sarwar

آخری سلام آخری سلام

میری سکینہ اس طرح نہ رونا

تم جاؤ کہاں اللہ جانے
مقتل میں رہیں کس حال میں ہم
اب خواب میں بابا آئیں گے
چاہے شام کا ہو زندان ہووے

میری سکینہ اس طرح نہ رونا

نہ میری بچی نہ اس طرح نہ رونا

ہم جاتے ہیں ملنے بابا سے
اب لوٹ کے ہم کو آنا نہیں
کچھ دیر لپٹ جا سینے سے
پھر باپ کا سینہ ملنا نہیں
سو جانا جہاں پھوپھیاں کہہ دیں
چاہے شام کا ہو زندان ہووے

میری سکینہ اس طرح نہ رونا

نہ میری بچی نہ اس طرح نہ رونا

جانے دے مجھے میداں کی طرف
دینا یہ تجھے قربانی ہے
راہوار کے میرے پاؤں نہ پڑ
میری بچی تو سیدانی ہے
جینا ہے تجھے زہرا کی طرح
چاہے شام کا ہو زندان ہووے

میری سکینہ اس طرح نہ رونا

نہ میری بچی نہ اس طرح نہ رونا

آ پونچھ لے آنسو آنکھوں سے
تو دیکھ لے چہرہ بابا کا
کل ہو سکتا ہے آ نہ سکے
پہچان لے چہرہ بابا کا
ہم ساتھ تیرا نہ چھوڑیں گے
چاہے شام کا ہو زندان ہووے

میری سکینہ اس طرح نہ رونا

نہ میری بچی نہ اس طرح نہ رونا

عباس کا دل اکبر کی بہن
جس وقت بندھے گردن میں رسن
تم بابا بابا مت کہنا
تڑپے گا میرا بے گور بدن
اصغر کی طرح سے چپ رہنا
چاہے شام کا ہو زندان ہووے

میری سکینہ اس طرح نہ رونا

نہ میری بچی نہ اس طرح نہ رونا

دیکھا ہے ریحان و سرور نے
خود شام میں جا کر یہ منظر
سیلاب ہے پرسہ داروں کا
مصروف بکا تا حد نظر
ہے سارا علاقہ بی بی کا
چاہے شام کا ہو زندان ہووے

میری سکینہ اس طرح نہ رونا

نہ میری بچی نہ اس طرح نہ رونا

آخری سلام آخری سلام

Akhri Salam Akri Salam

Meri Sakina Is Tarha Na Rona

Tum Jao Kahan Allah Janey
Maqtal Mein Rahy Kis Haal Mein Hum
Ab Khawab Mein Baba Ayen Gy
Chahy Shaam Ka Ho Zindaan Howy

Meri Sakina Is Tarha Na Rona

Na Meri Bachi Na Is Tarha Na Rona

Hum Jaty Hain Milny Baba Sy
Ab Laot Ky Hum Ko Ana Nahi
Kuch Dair Lipat Ja Seeney Sy
Phir Bap Ka Seena Milna Nahi
So Jana Jahan Phuphian Keh Den
Chahy Shaam Ka Ho Zindaan Howy

Meri Sakina Is Tarha Na Rona

Na Meri Bachi Na Is Tarha Na Rona

Janey Dy Mujhy Maidan Ki Taraf
Dena Yeh Tujhy Qurbani Hai
Rahwar Ky Mery Paon Na Parh
Meri Bachi Tu Syedani Hai
Jeena Hai Tujhy Zehra Ki Tarah
Chahy Shaam Ka Ho Zindaan Howy

Meri Sakina Is Tarah Na Rona

Na Meri Bachi Na Is Tarah Na Rona

Aa Ponch Ly Aansoo Ankhon Sy
Tu Dekh Ly Chehra Baba Ka
Kal Ho Skta Hai Aa Na Saky
Pehchan Ly Chehra Baba Ka
Hum Sath Tera Na Chorhen Gy
Chahy Shaam Ka Ho Zindaan Howy

Meri Sakina Is Tarah Na Rona

Na Meri Bachi Na Is Tarah Na Rona

Abbas Ka Dil Akbar Ki Bahan
Jis Waqt Bandhy Gardan Mein Rasan
Tum Baba Baba Mat Kehna
Tarhpy Ga Mera Bey Gor Badan
Asghar Ki Tarah Sy Chup Rehna
Chahy Shaam Ka Ho Zindaan Howy

Meri Sakina Is Tarha Na Rona

Na Meri Bachi Na Is Tarha Na Rona

Dekha Hai Rehan O Sarwar Ny
Khud Sham Mein Ja Kar Yeh Manzar
Sailab Hai Pursa Daron Ka
Masroof E Buka Ta Had E Nazar
Hai Sara Ilaqa Bibi Ka
Chahy Shaam Ka Ho Zindaan Howy

Meri Sakina Is Tarha Na Rona

Na Meri Bachi Na Is Tarha Na Rona

Akhri Salam Akhri Salam

Join Khairilamal on WhatsApp

WhatsApp

Leave a Reply