Reciter: Farhan Ali Waris

Rehai Qaid Se Zainab Lyrics In Urdu By Farhan Ali Waris

ہائے ہائے زینب ہائے زینب

کیا بیت گئی ہو گی زینب کے دل پہ لوگو
رہائی قید سے زینب کو جب ملی ہو گی

بنا حسین کے وہ کیسے گھر گئی ہو گی
رہائی قید سے زینب کو جب ملی ہو گی

اے نانا تیرے نواسے کو تیری امت نے
دفن کیا ہے یا عریاں ہی بن میں چھوڑ دیا
حسین یا حسین
حسین بادشاہ
حسین شہنشاہ
حسین دین ہے
حسین دیں پناہ
شہید کربلا
ضبیح نینوا
ہے تیرا گھر لٹا
بے جرم و بے خطا
حسین یا حسین یا حسین

بتول زادی یہی بات سوچتی ہو گی
رہائی قید سے زینب کو جب ملی ہو گی

پڑے تھے لاشے نوجوانوں کے دشت کربل میں
پڑا تھا غازی کا لاشہ بغیر شانوں کے
عباس ہائے عباس
عباس ہائے عباس
عباس با وفا
عباس با صفا
علی کی گود کا
ہے تو پالا ہوا
عباس معجزہ
ہے تو بتول کا
عباس اک نیا
ہے پیش مرحلہ
ہے زینب بے ردا
سفر ہے شام کا
ہے شامی ہے حیا
وا مصیبتا
عباس ہائے عباس ہائے عباس

جوان بھائی کے شانوں کو ڈھونڈتی ہو گی
رہائی قید سے زینب کو جب ملی ہو گی

لٹی تھیں دشت میں جو چادریں جو سیدانیوں کی
لوٹائیں عابد بیمار کو لعینوں نے
سجاد ہائے سجاد
سجاد ہائے سجاد
بیمار کربلا
اسیر بے خطا
تمھارا قافلہ
تو تھا لٹا ہوا
پہن کے بیزیاں
جدھر بھی تو گیا
وہ راستہ بھی تھا
لہو لہو ہوا
نہ جانے کس طرح
یہ تو نے سہہ لیا
وہ زینب حزیں
کا سر کھلا ہوا
پھر اس کے بعد بھی
تو جب تلک جیا
تمھاری آنکھ سے
سدا ہے خوں بہا
سجاد ہائے سجاد ہائے سجاد

علی کی لاڈلی حسرت سے دیکھتی ہو گی
رہائی قید سے زینب کو جب ملی ہو گی

وہ چھ مہینے کے بچے کو تیر مارا تھا
وہ شیر خوار کا سر بھی سناں پہ آیا تھا
صغیر ہائے صغیر
صغیر ہائے صغیر
صغیر کربلا
ہے کشتہ جفا
کسی کی دشمنی
ہے تم سے کیوں بھلا
تمھارا سن بھی
نہیں ہے جنگ کا
قضا کا تیر ہے
بدست حرملا
تمھارا پھول سے
بھی نرم ہے گلہ
رباب کس طرح
کرے گی حوصلہ
خدارا حوصلہ
حسین پر یہی
تو وقت ہے کڑا
لہو صغیر کا
ہے منہ پہ مل لیا
صغیر ہائے صغیر ہائے صغیر
بتول غیز میں خون اپنا پیٹتی ہو گی
رہائی قید سے زینب کو جب ملی ہو گی

گیا جو قافلہ مقتل میں آل احمد کا
ویران دشت میں ہر بی بی اپنے پیاروں کو
جوان ہائے جوان
جوان ہائے جوان
شبیہ مصطفی
وزیر مرتضی
اٹھارہ سال کا
تو برکھے میں پلا
پھوپھی نے ناز سے
تجھے جواں کیا
خدا کے واسطے
ابھی نہ رن میں جا
حسین کس طرح
یہ دیکھ پائے گا
جوان کا جگر
سناں کا ٹوٹنا
بہن تھی منتظر
کہ لوٹ کے تو آ
وہ اب بھی دیکھتی
ہے تیرا راستہ
جوان ہائے جوان ہائے جوان
تڑپتی رھوپ میں رو رو کے ڈھونڈتی ہو گی
رہائی قید سے زینب کو جب ملی ہو گی

سنا جو ہو گا سکینہ نے قبر میں اختر
کہ سب چلے ہیں مجھے جھوڑ کے مدینے کو
معصومہ خواب میں تنہا ہی رو رہی ہو گی
رہائی قید سے زینب کو جب ملی ہو گی

ہائے ہائے زینب ہائے زینب

ہائے زینب
ہائے زینب

Haye Haye Zainab Haye Zainab

Kya Beet Gai Ho Gi Zainab Ky Dill Py Logo
Rehai Qaid Se Zainab Ko Jab Mili Ho Gi

Bina Hussain Ky Woh Kaisy Ghar Gai Ho Gi
Rehai Qaid Se Zainab Ko Jab Mili Ho Gi

Ay Nana Tere Nawasy Ko Teri Ummat Ny
Dafan Kiya Hai Ya Uryan Hi Ban Mein Chorh Diya
Hussain Ya Hussain
Hussain Badshah
Hussain Shehanshah
Hussain Deen Hai
Hussain Deen Panah
Shaheed E Karbala
Zabeeh E Nainawa
Hai Tera Ghar Luta
Bey Jurm O Bey Khata
Hussain Ya Hussain Ya Hussain

Batool Zadi Yehi Bat Sochti Ho Gi
Rehai Qaid Se Zainab Ko Jab Mili Ho Gi

Parhy Thy Lashy Jawanon Ky Dasht E Karbal Mein
Parha Tha Ghazi Ka Lasha Baghair Shanon Ky
Abbas Haye Abbas
Abbas Haye Abbas
Abbas Bawafa
Abbas Ba Safa
Ali Ki Goud Ka
Hai Tu Pala Hua
Abbas Mojza
Hai Tu Batool Ka
Abbas Ek Naya
Hai Paish Marhala
Hai Zainab Bey Rida
Safar Hai Sham Ka
Hai Shami Be Haya
Wa Museebata
Abbas Haye Abbas Haye Abbas

Jawan Bhai Ky Shanon Ko Dhundti Ho Gi
Rehai Qaid Se Zainab Ko Jab Mili Ho Gi

Luti Thiin Dasht Mein Jo Chadaren Saidaniyon Ki
Laotaiin Abid E Beemar Ko Laeenon Ny
Sajjad Haye Sajjad
Sajjad Haye Sajjad
Beemar E Karbala
Aseer E Bay Khata
Tumhara Qafila
To Tha Luta Hua
Pehn Ky Beirhain
Jidhar Bhi Tu Gaya
Woh Rasta Bhi Tha
Laho Lahoo Hua
Na Jany Kis Tarah
Yeh Tu Ny Seh Liya
Woh Zainab E Hazeen
Ka Sar Khula Hua
Phir Us Ky Bad Bhi
Tu Jab Talak Jiya
Tumhari Ankh Se
Sada Hai Khoon Baha
Sajjad Haye Sajjad Haye Sajjad

Ali Ki Laadli Hasrat Se Dekhti Ho Gi
Rehai Qaid Se Zainab Ko Jab Mili Ho Gi

Woh 6 Mahiney Ky Bachy Ko Teer Mara Tha
Woh Sheer Khuaar Ka Sar Bhi Sinaan Py Aaya Tha
Sagheer Haye Sagheer
Sagheer Haye Sagheer
Sagheer E Karbala
Hai Kushta E Jafa
Kisi Ki Dushmani
Hai Tum Sy Kiun Bhala
Tumhara Sin Bhi
Nahi Hai Jang Ka
Qaza Ka Teer Hai
Ba Dast E Hur Mala
Tumhara Phool Se
Bhi Narm Hai Gala
Rabab Kis Tarah
Kary Gi Hosla
Khudara Hosla
Hussain Par Yehi
To Waqt Hai Karha
Lahoo Sagheer Ka
Hai Munh Py Mall Liya
Sagheer Haye Sagheer Haye Sagheer
Batool Ghaiz Mein Khoon Apna Peet’ti Ho Gi
Rehai Qaid Se Zainab Ko Jab Mili Ho Gi

Gaya Jo Qafila Maqtal Mein Aal E Ahmad Ka
Weeran Dasht Mein Har Bibi Apny Pyaron Ko
Jawan Haye Jawan
Jawan Haye Jawan
Shabeeh E Mustafa
Wazeer E Murtaza
Atthaara Saal Se
Tu Burkhy Mein Pala
Phuphi Ny Naaz Se
Tujhe Jawan Kiya
Khuda Ky Wasty
Abhi Na Ran Mein Ja
Hussain Kis Tarah
Yeh Dekh Paye Ga
Jawan Ka Jigar
Sinaan Ka Tootna
Behan Thi Muntazir
Keh Laot Ky Tu Aa
Woh Ab Bhi Dekhti
Hai Tera Rasta
Jawan Haye Jawan Haye Jawan
Tarhapti Dhoop Mein Ro Ro Ky Dhundti Ho Gi
Rehai Qaid Se Zainab Ko Jab Mili Ho Gi

Suna Jo Ho Ga Sakina Ny Qabr Mein Akhtar
Keh Sab Chaly Hain Mujhe Chorh Ky Madiney Ko
Masooma Khuwab Mein Tanha Hi Ro Rahi Ho Gi
Rehai Qaid Se Zainab Ko Jab Mili Ho Gi

Haye Haye Zainab Haye Zainab

Haye Zainab
Haye Zainab

Join Khairilamal on WhatsApp

WhatsApp

Leave a Reply